رومیو اینڈ جولیٹ میں شکسپیئر کا مشہور جملہ انگریزی میں زباں زد عام و خاص ہے کہ نام میں کیا رکها ہے What is in a name اگر گلاب کو ہم کوئی اور عکسی صفات والا نام بهی دے دیں ببول یا چریتا کہ دیں تو بهی گلاب اور اس کی نرم و نازک مخملی پنکھڑیوں کی خوبصورتی ہی نظر آئے گی اور اس سے میٹهی خوشبو ہی ملے گی…. شکسپیئر نے جس سیاق و سباق میں ایک خاص مفہوم ادا کرنے کے لیے کہا وہ بدون ادنیٰ شک درست ہے…. 
مگر نام میں بہت کچھ ہے. دینی تعلیمات کی رو سے اسم کا اثر مسمی پر پڑتا ہے. ہر مذہب میں بچے کی پیدائش کے بعد سب سے پہلا کام نام رکهنا ہوتا ہے اور اس کے لئے بڑا اہتمام ہوتا ہے. اسلام میں ساتویں دن عقیقہ اور نام رکهنے کا حکم ہے ویسے پہلے دوسرے اور تیسرے دن بهی اللہ کے رسول صل اللہ علیہ و سلم نے کئی بچوں کا نام رکها ہے. 
بچوں کے نام رکهنے میں سب سے پسندیدہ نام احمد اور محمد بتایا گیا ہے. دنیا بهر میں سب سے زیادہ مقبول عام و خاص نام محمد ہے. 
نام تجویز کرتے وقت عموماً تین باتوں میں کوئی ایک یا دو یا تینوں زیر نظر ہوتی ہیں :

1- نام کا معنی اور مفہوم … اس لئے کہ نام کا اثر اس کی شخصیت پر پڑتا ہے. بعض بچوں کی ذہنی روش دیکهتے ہوئے بزرگانِ دین نے ان کے نام بدل دیئے. اسی طرح بعض صحابہ کرام رض کے نام کے مفہوم میں شرک کا شائبہ محسوس کیا تو آپ صل اللہ علیہ و سلم نے ان کے نام بدل دیا. 
2- کسی عظیم اسلامی شخصیت کے کارہائے نمایاں اور صفات میرے بچے میں آئے اس کے مد نظر ان کا نام اپنے بچے اور بچیوں کو دینا.
3-تاریخی نام .. ابجدی حروف ؛ ابجد هوز حطی الخ جس میں ہر حرف کے مقابل عدد ہے ا 1 ب 2 ج 3 د 4 ه 5 و 6 ح 7 ط 8 ی 9…اس کے ذریعے تارخ پیدائش کے حساب سے حروف کا انتخاب اور نام کی تشکیل ہوتی ہے.
غیر مسلموں کے یہاں بهی अंकजयोतिश नाम دیئے جاتے ہیں اور چونکہ ایسا مانا جاتا ہے کہ نام کا اثر اس کی شخصیت زندگی اور مستقبل پر ہوتا ہے اس لئے وہ نجوم کی اثراندازی کے مدنظر نام کا انتخاب کرتے ہیں یا دیوی دیوتاؤں کے نام پر نام رکهتے ہیں. (موضوع کی طوالت کے پیش نظر اس کی تفصیل سے گریز کرتا ہوں)
3- مرکب نام ؛ مرکب نام کا رواج عموماً پاکستان بنگلہ دیش اور ہندوستان خاص طور شمالی ہند میں ہے. مرکب نام عموماً اللہ یا اس کے رسول صل اللہ علیہ و سلم کی طرف نسبت کرنے کے لئے جیسے لطافت #اللہ ، عبد #اللہ اور امة #الله ، هبة #الہادی، نور #الہی اور احسان #باری یا #محمد اقبال ، گلزار#احمد یا اچها مفہوم والا نام بنانے کے لئے رکهے جاتے ہیں. جیسے عماد #الدین دین کا ستون ، شمیمہ#جنت ، #شگفتہ جبین وغیرہ. جنوبی ہند وغیرہ میں نام سے قبل والد اور دادا کا نام جیسے پی کے عبدالعزیز اور مہاراشٹرا وغیرہ میں نام کے بعد گاؤں کا نام جیسے هیمنت کرکرے …. 
عرب امریکہ اور یورپ میں عموماً مفرد نام رکهے جاتے ہیں مگر اس کے ساتھ والد اور دادا کا نام لازمی ہوتا ہے. فیلیپ جورج ولسن … خواتین اپنے نام کے بعد شادی سے قبل والد کا نام اور شادی کے بعد شوہر کے نام کا اضافہ کرتی ہیں. …. امارات میں مجهے اپنے بچے کی پیدائش کے بعد برتھ سرٹیفیکیٹ بنواتے وقت یہ جهیلنا پڑا کہ میں نے مفہوم کے اعتبار سے اس کا مرکب نام احمد جاوید رکها اور فارم میں یہی بهرا مگر آفیسر انچارج نے کہا کہ جاوید تو دادا کا نام ہے اس لئے یہ غلط ہے میں نے پاسپورٹ میں درج والد صاحب کا نام دیکهایا کہ ان کا نام عبداللہ ہے مگر وہ میرے منتخب نام کے لئے راضی نہیں ہوا اس نے کہا کہ احمد کے بعد والد کا نام مسعود لکها جائے گا اس کے بعد دادا کا نام جاوید یعنی ” احمد مسعود جاوید ” …. 
باقی آئندہ…….. ایک میاں کے تین نام ؛ فضل فضلو فضل الرحمن