36 Views

جموں وکشمیر،17اکتوبر(اے یو ایس) جموں وکشمیر کی سائبر پولیس نے آئی سی ڈی ایس کے ایک فرضی افسر کو نوکریوں کا جھانسہ دینے اور لڑکیوں کو بلیک کرکے پیسہ وصولنے کی پاداش میں لازی بل اننت ناگ کے ایک شخص کو گرفتار کرکے سلاخوں کے پیچھے پہنچا دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق لازی بل اننت ناگ کا محمد حسین میر عرف بٹہ مورے انٹیگریٹڈ چائلڈ ڈیولپمنٹ اسکیم سے منسلک ایک افسر کے طور پر اپنے آپ کو پیش کرتا تھا، جس کے بعد کئی خواتین اور مفلس افراد اس کے جھانسے میں آگئے اور ان سے مذکورہ شخص نے مبینہ طور پر لاکھوں روپئے بطور رشوت حاصل کئے۔پولیس کے مطابق، ملزم کو ایک شکایت کی بنا پر گرفتارکیا گیا۔ شکایت شمالی کشمیر کے بارہمولہ کی ایک خاتون نے درج کرائی،

جس میں خاتون نے الزام لگایا کہ ایک نامعلوم فیس بک صارف نے اس کو فریب میں لاکر اسے نوکری کا جھانسہ دیا۔ خاتون نے شکایت میں درج کیا کہ مذکورہ فیس بک صارف آئی سی ڈی ایس کا فرضی پروجیکٹ افسر کے طور پر اپنے آپ کو فیس بک پر پیش کرتا ہے اور نوکری کا جھانسہ دے کر روپیوں کا تقاضہ کرتا ہے۔ خاتون کی تحریری شکایت کے بعد سائبر پولیس اسٹیشن میں باضابطہ طور پر ایف آئی آر درج ہوئی اور پولیس نے تحقیقات شروع کر دی ہے۔