ممبئی،04جولائی (اے یوایس)مہاراشٹر کے سابق وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے نے ضلعی سربراہوں کے ساتھ میٹنگ میں زبردست بارش کی۔ ٹھاکرے نے درپردہ حملہ کرتے ہوئے کہا کہ بی جے پی کی کوشش شیوسینا کو ختم کرنے کی ہے۔ انہوں نے ضلعی سربراہوں سے شیوسینا کو مضبوط کرنے پر زور دیا ہے۔ ساتھ ہی انہوں نے بی جے پی اور شندے دھڑے کو للکارتے ہوئے کہا کہ اگر آپ میں ہمت ہے تو وسط مدتی الیکشن لڑ کر دکھائیں۔واضح رہے کہ ایکناتھ شندے نے آج مہاراشٹر قانون ساز اسمبلی میں اعتماد کا ووٹ حاصل کر لیا ہے۔ممبئی کے شیوسینا بھون میں پارٹی کی جانب سے ضلعی صدور کی میٹنگ بلائی گئی جس میں ادھو ٹھاکرے نے کہا کہ اگر آپ میں ہمت ہے تو وسط مدتی الیکشن لڑ کر دکھائیں اس طرح کے کھیل کھیلنے کے بجائے عوام کے سامنے جائیں عدالت۔

اگر ہم غلط ہیں تو لوگ ہمیں کہتے ہیں آپ کو گھر بٹھا دیں گے اور اگر آپ غلط ہیں تو لوگ آپ کو گھر بٹھا دیں گے۔ساتھ ہی انہوں نے الزام لگایا کہ ڈاکٹر بابا صاحب امبیڈکر کے آئین کو توڑنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی آزادی کے امرت جینتی سال میں مہاراشٹرا میں کیا شروع ہوا ہے اس کے بارے میں سب سچ بتائیں قانون ساز اسمبلی کا من مانی طرز عمل آئین کی توہین ہے۔واضح رہے کہ شیوسینا کے 39 سے زیادہ ایم ایل اے ادھو ٹھاکرے کا ساتھ چھوڑ کر ایکناتھ شندے کی عدالت میں چلے گئے ہیں۔ اس کے بعد شندے نے بی جے پی کے ساتھ مل کر مہاراشٹر میں حکومت بنائی۔